یہ تحریر العربية (عربی) English (انگریزی) Русский (رشیئن) ไทย (تھائی) 简体中文 (چائینیز) میں بھی دستیاب ہے۔

مراقبہ

ذہنی سکون کے لئے مراقبہ کیجئے

بے قراری، عدم سکون اور اضطراب سے رستگاری حاصل کرنے کے لئے اسلاف سے جو ہمیں ورثہ ملا ہے اس کانام مراقبہ ہے۔ مراقبہ کے ذریعے ہم اپنے اندر مخفی صفات کو منظر عام پرلاسکتے ہیں۔ خوف و دہشت میں مبتلا،عدم تحفظ کے احساس میں سسکتی اور مصائب و آلام میں گرفتارنوع انسانی کے لئے مراقبہ ایک ایسا لائحہ عمل ہے جس پر عمل پیرا ہوکر ہم اپنا کھویا ہوا اقتدار دوبارہ حاصل کر کے زندہ قوموں کی صفوں میں ممتاز مقام حاصل کر سکتے ہیں ۔

پتّہ اور انجن

ایک مرتبہ ڈاکٹرعبدالحمید صاحب نے ایک تقریب میں شرکت کے لئے بمبئی جانے کا ارادہ کیا۔ اورحضرت باباجان تاج الدینؒ کی خدمت میں حاضر ہوکر اجازت چاہی۔ آپ نے فرمایا۔’’مت جاؤ!راستہ تمہارے لئے خطرناک ہے۔‘‘ جب انہوں نے زیادہ اصرار کیا توآپ نے درخت سے پتّہ توڑکر

⁠⁠⁠حوالہ : سوانح حیات بابا تاج الدین ناگپوری رحمۃ اللہ علیہ

ملک الموت اورایک عورت کا مکالمہ

میں نے مراقبہ موت میں دیکھا کہ کھیت کے کنارے ایک کچا کوٹھا بنا ہوا ہے۔ کوٹھے کے باہر چہار دیواری ہے۔ چہار دیواری کے اندر صحن ہے۔ صحن میں ایک گھنا درخت ہے۔ غالباً یہ درخت نیم کا ہے۔ اس درخت کے نیچے بہت سے لوگ جمع ہیں۔ میں بھی وہاں پہنچ گیا۔ میں نے دیکھا

⁠⁠⁠حوالہ : احسان و تصوف

قرض کی وصولی کے لئے

       ایک کاغذ پر(کسی بھی روشنائی سے) لکھکر اس کاغذ  کی چارتہیں کر کے تعویذ بنالیں اور اس کو دو پتھروں کے درمیان ایسی جگہ رکھدیں جہاں ان پتھروں کو کوئی ہلائے جلائے نہیں ۔ ہر پتھر کا وزن کم ازکم دو سیر ہونا چاہئیے،دونوں پتھر مسطح ہوں تا کہ تعویذ  پر او

⁠⁠⁠حوالہ : روحانی علاج

زکام ۔ نزلہ

یہ مرض معدہ کی خرابی ، سردی کے اثر اوردماغی کمزوری سے ہوتاہے۔ اس کے لئے گہرے نیلے رنگ کے پانی کو خوراک اورشعاع نہایت مفید ہے، اس سے پرانے سے پرانا زکام کافورہوجاتاہے۔ نزلہ کے ساتھ اگرسردی سے بخار بھی ہے تو سرخ رنگ کا پانی اور شعاع استعمال کرناچاہئے ہاض

⁠⁠⁠حوالہ : رنگ و روشنی سے علاج

علمِ حصولی

سوال: روحانیت میں علم حصولی کا تذکرہ کیا جاتا ہے۔ اس کے حصول کا کیا طریقہ ہے؟ مہربانی فرما کر بتائیں۔ جواب: ہم نے علوم کو دو درجوں میں بیان کیا ہے ایک کا نام علم حصولی قرار پایا اور دوسرے کا نام علم حضوری رکھا گیا۔ علم حصولی اور علم حضوری کے ضمن میں عق

⁠⁠⁠حوالہ : توجیہات

یوناہ

حضرت یونسؑ کو ۲۸ سال کی عمر میں نبوت عطا ہوئی۔ آپ پر صحیفہ نازل ہوا جو تورات میں ’’یوناہ‘‘ کے نام سے موجود ہے۔ حضرت یونسؑ نینوا کی طرف مبعوث کئے گئے۔ حضرت سلیمانؑ کے انتقال کے بعد بنی اسرائیل ایک مرتبہ پھر کفر و شرک، بت پرستی اور نافرمانی میں مبتلا ہو

⁠⁠⁠حوالہ : محمد الرّسول اللہ(صلی اللہ علیہ وسلم) جلد سوئم

روشنیوں کا سیب

سوال: کیا مادے کی بنیاد رنگین روشنیاں ہیں؟ ہم مختلف رنگوں سے کس طریقہ پر غذا حاصل کر سکتے ہیں؟ کیا گندمی رنگ کی روشنیاں غذائی ضروریات پوری کرتی ہیں؟ روحانیت کے حوالے سے اس پر روشنی ڈالیں۔ جواب: اگر گندم کے اندر بھوک دور کرنے والی انرجی کی روشنیاں آپ مع

⁠⁠⁠حوالہ : توجیہات

مشاہداتی نظر

اللہ تعالیٰ نے قرآن پاک میں سورہ بقرہ کی ابتدائی آیتوں میں فرمایا ہے کہ “اس کتاب میں شک نہیں ہے۔ یہ کتاب ان لوگوں کیلئے ہدایت ہے جو متقی ہیں اور متقی وہ لوگ ہیں جو غیب پر یقین رکھتے ہیں۔” (سورۃ البقرہ۔ آیت۱) غیب پر یقین رکھنے سے مراد یہ ہے کہ وہ مشاہدا

⁠⁠⁠حوالہ : آگہی

گرم لہریں

محبت پرسکون زندگی اور اطمینان قلب کا ایک ذریعہ ہے۔ اس لئے کوئی انسان جس کے اندر محبت کی لطیف لہریں دور کرتی ہیں وہ مصائب و مشکلات اورپیچیدہ بیماریوں سے محفوظ رہتا ہے، اس کے چہرے میں ایک خاص کشش پیدا ہو جاتی ہے۔ اس کے برخلاف نصرت کی کثیف، شد ید اور گرم

⁠⁠⁠حوالہ : کشکول

ماورائی لہر

نظریۂ رنگ و نور کا شارح کرتا ہے کہ کائنات اور کائنات کے اندر موجود رنگینیاں اس لئے پیدا کی گئی ہیں کہ آدم زاد ان سے استفادہ کرے۔ یہ نہیں ہونا چاہئے کہ دنیا کی لذتوں سے فرار اختیار کر کے کسی بیان یا کسی گوشہ میں بیٹھ جائے ۔ ماورائی علوم کے بارے میں ایسے

⁠⁠⁠حوالہ : نظریٗہ رنگ و نُور

آزمائش

بِسْمِ اللہِ الرَّحْمٰنِ الرَّحِیۡمِ وَلَنَبْلُوَنَّكُمْ بِشَیۡءٍ مِّنَ الْخَوۡفِ وَالْجُوۡعِ وَنَقْصٍ مِّنَ الۡاَمۡوَالِ وَالۡاَنۡفُسِ وَالثَّمَرٰتِ ؕ وَبَشِّرِ الصّٰبِرِیۡنَ ﴿۱۵۵﴾ۙ ترجمہ: اور ہم کسی قدر خوف اور بھوک اور مال اورجانوں اور میووں کے نقصا

⁠⁠⁠حوالہ : نُورِ ہدایت

معاشیایات

کاروبار میں حسن اخلاق کاروباری ترقی کے لئے ضمانت ہے۔ دکاندار کی حیثیت سے آپ کے اوپر بہت سی ذمہ داریاں عائد ہوتی ہیں۔ 1۔ یہ کہ خریداروں کو اچھے سے اچھا مال فراہم کریں۔ جس مال پر آپ کو خود اعتماد نہ ہو وہ ہرگز کسی کو نہ دیں۔ 2۔ آپ کو اپنے کردار سے یہ ثاب

⁠⁠⁠حوالہ : تجلیات

ٹوٹ پھوٹ

نسلی اعتبار سے ہمارے بچؔے جس مذہب کے پیرو کار ہیں انہیں اس مذہب میں سکون نہیں ملتا تو وہ بغاوت پر آمادہ ہو جاتے ہیں ۔ سکون ایک ایسی حقیقت ہے جس کے ساتھ پوری کائنات بندھی ہوئی ہے حقیقت فکش نہیں ہوتی۔ اب دیکھنا یہ ہے کہ بندے کے اندر وہ کون سی طاقت ہے جو

⁠⁠⁠حوالہ : کشکول

وضع حمل کے بعد پیٹ کا بڑھنا

اکثر دیکھا گیا ہے کہ اگر بچہ  کی پیدائش کے بعد پیٹ کی صحیح دیکھ بھال نہ کی جائے تو  پیٹ بڑھ جاتا ہے۔ اس کےلئے  تَسْطِیْرٍشَئَ الْحِرْصْ زرد رنگ سے پلیٹ پر لکھ کر صبح، دوپہر اور شام ایک ایک پلیٹ پانی سے دھو کر پلائیں یہاں تک کے پیٹ اپنی اصلی حالت پر آجا

⁠⁠⁠حوالہ : روحانی علاج

فوٹان اور الیکٹران

اوّل ہم ان روشنیوں کا تذکرہ کرتے ہیں جو خاص طورپر آسمانی رنگ پر اثر انداز ہوتی ہیں۔ روشنیوں کا سر چشمہ کیا ہے اس کا بالکل صحیح علم انسان کو نہیں ہے۔ قوسِ قزح کا جو فاصلہ بیان کیا جاتاہے وہ زمین سے تقریباًنو(۹)کروڑمیل ہے، اس کے معنی یہ ہوئے کہ جورنگ ہمی

⁠⁠⁠حوالہ : رنگ و روشنی سے علاج

ترقی یافتہ دور

آج کی ترقی یافتہ دنیا میں بے شمار ایجادات اور لامتناہی آرام و آسائش کے باوجود ہر شخص بے سکون، پریشان اور عدم تحفظ کا شکار ہے ۔ سائنس چوں کہMATTER پر یقین رکھتی ہے ۔اور مادؔہ یا MATTER عارضی اور فکشن ہے۔ اس لئے سائنس کی ہر ترقی ،ہر ایجاد اور آرام و آسائ

⁠⁠⁠حوالہ : کشکول

مسجد الحرام

مسجد الحرام کے معنی حرمت اور عزت والی مسجد کے ہیں۔ اس سے مراد وہ عبادت گاہ ہے جس کے وسط میں خانہ کعبہ واقع ہے۔ ’’پاک ذات ہے جو لے گیا اپنے بندے کو راتوں رات ادب والی مسجد(مسجدالحرام) سے پرلی مسجد (مسجد الاقصیٰ)۔‘‘ (سورۃ بنی اسرائیل۔۱) جغرافیہ دانوں کی

⁠⁠⁠حوالہ : رُوحانی حج و عُمرہ

دادی اماں

دادی اماں اتنی خوبصورت تھیں کہ پورے خاندان میں ان کی خوبصورتی ضرب المثل تھی۔ اتنی نیک تھیں کہ ان کی نیکی اور پاکیزگی کے چرچے عام تھے اتنی سگھڑ اور سلیقہ شعار تھیں کہ مائیں اپنی بیٹیوں کو ان کی نگرانی میں دینا اپنے لیئے فخر سمجھتی تھیں۔ میں نے انہیں اُس

⁠⁠⁠حوالہ : آوازِ دوست

کیا رنگین روشنیاں غذائی ضروریات پوری کرتی ہیں؟

سوال: کیا مادے کی بنیاد رنگین روشنیاں ہیں کیا ہم مختلف رنگوں سے کسی طرح پر غذا حاصل کر سکتے ہیں۔ کیا گندمی رنگ کی روشنیاں غذائی ضروریات پوری کریں گی؟ جواب: اگر گندم کے اندر دَور کرنے والی انرجی کی روشنیاں آپ معلوم کر لیں اور انہیں استعمال کرنا سیکھ لیں

⁠⁠⁠حوالہ : روح کی پکار

روحانی تفسیر

سوال: قرآن پاک میں ارشاد ہے کہ اللہ تعالیٰ نے مخلوق کی تخلیق کے بعد اس سے مخاطب ہو کر فرمایا۔’’کیا نہیں ہوں میں ربّ تمہارا؟‘‘ مخلوق نے اقرار کیا کہ ’’بے شک آپ ہمارے ربّ ہیں‘‘۔ اس آیت کی روحانی تفسیر کیا ہے؟ جواب: جب کچھ نہیں تھا تو اللہ تھا۔ اللہ تعالی

⁠⁠⁠حوالہ : روح کی پکار

براہِ مہربانی اپنی رائے سے مطلع کریں۔

    Your Name (required)

    Your Email (required)

    Subject (required)

    Category

    Your Message (required)