یہ تحریر العربية (عربی) English (انگریزی) Русский (رشیئن) ไทย (تھائی) 简体中文 (چائینیز) میں بھی دستیاب ہے۔

مراقبہ

ذہنی سکون کے لئے مراقبہ کیجئے

بے قراری، عدم سکون اور اضطراب سے رستگاری حاصل کرنے کے لئے اسلاف سے جو ہمیں ورثہ ملا ہے اس کانام مراقبہ ہے۔ مراقبہ کے ذریعے ہم اپنے اندر مخفی صفات کو منظر عام پرلاسکتے ہیں۔ خوف و دہشت میں مبتلا،عدم تحفظ کے احساس میں سسکتی اور مصائب و آلام میں گرفتارنوع انسانی کے لئے مراقبہ ایک ایسا لائحہ عمل ہے جس پر عمل پیرا ہوکر ہم اپنا کھویا ہوا اقتدار دوبارہ حاصل کر کے زندہ قوموں کی صفوں میں ممتاز مقام حاصل کر سکتے ہیں ۔

عظیم الشان شہر

یہ اس قدر عظیم الشان شہر جس کی آبادی اربوں کھربوں سے متجاوز ہے، لاکھوں کروڑوں سال سے آباد ہے۔ اس شہر میں گھوم کر لاکھوں سال کی تہذیب کا مطالعہ کیا جا سکتا ہے۔ یہاں ایسے لوگ بھی آباد ہیں جو آگ کے استعمال سے واقف نہیں اور ایسے لوگ بھی آباد ہیں جو پتھر کے

⁠⁠⁠حوالہ : مراقبہ

ایڈز

حضرت لوطؑ کے قصے میں غیر طبعی عمل کا تذکرہ ہے اور اس غیر طبعی عمل کو اللہ تعالیٰ نے اس لئے ناپسند کیا ہے کہ اس سے نوع انسانی میں ایسی بیماریاں پیدا ہو جاتی ہیں جو انسانی تباہی کا پیش خیمہ ہیں۔ اللہ تعالیٰ رحمٰن و رحیم ہیں وہ اپنی مخلوق سے ستر ماؤں سے ز

⁠⁠⁠حوالہ : محمد الرّسول اللہ(صلی اللہ علیہ وسلم) جلد سوئم

بی بی میمونہ حفیظؒ

بی بی میمونہؒ نے اپنے روحانی استاد کی نگرانی میں سلوک کا راستہ طے کیا اور اللہ نے انہیں عارفہ بنا دیا۔ ان کی ذات سے اللہ کی مخلوق کو فیض پہنچا، نہایت توجہ سے سب کے مسائل سنتیں اور تسلی و تشفی دیتیں۔ پوشیدہ طریقے سے ضرورت مندوں کی مدد کرتی تھیں۔ انہیں ک

⁠⁠⁠حوالہ : ایک سو ایک اولیاء اللہ خواتین

کھنڈرات

جو قوم دولت پرستی میں مبتلا ہو جاتی ہے، ذلیل و خوار ہو جاتی ہے یہ کوئی کہانی نہیں ہے۔ زمین پر اس کی شہادتیں موجود ہیں۔ بڑی بڑی سلطنتوں اور محلات کے مالک، ان کے عالیشان محلات آج کھنڈرات کی شکل میں زمین پر جگہ جگہ موجود ہیں۔ ’’کیا یہ لوگ زمین پر گھوم پھر

⁠⁠⁠حوالہ : کشکول

آسمان سے نوٹ گرا

یہ بات ہم جانتے ہیں کہ کسی چیز کے اوپر یقین کا کامل ہو جانا اُس وقت ممکن ہے جب وہ چیز یا عمَل جس کے بارے میں ہم جانتے ہیں کہ یہ کس طرح واقع ہو گی، بغیر کسی اِرادے اِختیار اور وسائل کے پوری ہوتی رہے۔ ایک دفعہ کا ذکر ہے میں کمرے میں بیٹھا ہوا قلندر باباا

⁠⁠⁠حوالہ : قلندر شعور

اللہ تعالیٰ کا دیدار

رجب کے مہینے میں ۲۷ویں شب کو خاتم النبین حضرت محمدﷺ  چچازاد بہن ام ہانی کے گھر آرام فرما رہے تھے کہ حضرت جبرائیل علیہ السلام تشریف لائے اور عرض کیا: ”یارسول اللہ ﷺ! اللہ تعالیٰ نےآپکو یاد فرمایا ہے۔“ حضرت محمدﷺ حضرت جبرائیلؑ کے ہمراہ زم زم کے کنوئیں کے

⁠⁠⁠حوالہ : بچوں کے محمد ﷺ (جلد دوئم)

یہ وقت بھی گزر جائے گا

کہتے ہیں کہ کسی ملک پر ایک نہایت سمجھدار بادشاہ حکومت کرتا تھا، ایک مرتبہ اس نے اپنے ملک کے تمام مفکروں اور دانشوروں کو جمع کر کے ان سے پوچھا کہ کیا کوئی ایسا مشورہ یا مقولہ ہے کہ جو ہر قسم کے حالات میں کام کرے، الگ الگ صورتحال اور مختلف اوقات میں اس ا

⁠⁠⁠حوالہ : وقت؟

حروف مقطعات

سوال: میں نے حروف مقطعات کی تفسیر و توجیہہ کے سلسلے میں جب مختلف مفسرین اور علماء کی تشریحات کی طرف رجوع کیا تو مجھے تسلی و تشفی نہیں ہوئی۔ مثلاً ایک مشہور عالم دین اور مفسر نے لکھا ہے کہ زمانہ جاہلیت میں عرب کے شعراء اپنے شعروں میں عجیب و غریب الفاظ ا

⁠⁠⁠حوالہ : روحانی ڈاک (جلد اوّل)

ذات کا مطالعہ

ہم جب اپنے آپ کا مطالعہ کرتے ہیں تو یہ کہتے ہیں کہ ہمارے پاس ایک محدود اور فنا ہونے والا جسم ہے اور یہی ہماری زندگی کی پہچان ہے۔ یہ جسم جو ہمیں نظر آتا ہے۔ اس کے اجزاءِ ترکیبی کثافت، گندگی، تعفّن اور سڑاند ہیں۔ اس سڑاند کی بنیاد اس نظریے پر قائم ہے کہ

⁠⁠⁠حوالہ : قلندر شعور

شہد کا پیالہ

آئیے ! سراغ لگا ئیں کہ وہ کون سے اسباب ہیں جن کی وجہ سے دشمن حاکم اور ہم محکوم بن گےؑہیں۔ دو وجوہات ہیں ۔ دنیا کی محبت اور، مرنے کا خوف۔ ایک با ہمت اور بہادر انسان جس کا دل خالق کائنات کی محبت میں سرشار ہے موت کے کرخت وجود کو اپنے سامنے دیکھ کر مسکراتا

⁠⁠⁠حوالہ : کشکول

حضور نبی کریم ﷺ کا ارشاد

سوال: سیدنا حضور علیہ الصّلوٰۃ و السّلام کا ارشاد ہے کہ ’’مر جاؤ مرنے سے پہلے‘‘۔ حضورﷺ کے اس حکم پر عمل کرنے کیلئے ہمیں کیا کرنا چاہئے؟ جواب: سیدنا حضور علیہ الصّلوٰۃ و السّلام کے اس ارشاد مبارک کے بارے میں کہا جاتا ہے کہ انسان خواہشات کو ختم کر دے یا

⁠⁠⁠حوالہ : روح کی پکار

دار الندوۃ

دار الندوۃ میں اجلاس ہوا۔ سیّدنا علیہ الصلوٰۃ والسلام کو زنجیروں میں جکڑ کر قید کرنے اور جلاوطن کرنے کی تجاویز پر اتفاق نہیں ہوسکا۔ ابوجہل کی طرف سے تجویز پیش کی گئی کہ ہر قبیلہ سے ایک تندرست و توانا اۤدمی لیا جائے سب مل کر محمدؐ پر حملہ اۤور ہوں اور ت

⁠⁠⁠حوالہ : محمد الرّسول اللہ(صلی اللہ علیہ وسلم) جلد اوّل

جنسی امراض

دونوں سجدوں کے درمیان بیٹھنا (جلسہ) گھٹنوں اور پنڈلیوں کو مضبوط بناتا ہے۔ اس کے علاوہ رانوں میں جو پٹھے اللہ تعالیٰ نے نسل کشی کے لئے بنائے ہیں ان کو ایک خاص قوت عطا کرتا ہے جس سے مردانہ اور زنانہ کمزوریاں دور ہو جاتی ہیں تا کہ انسان کی نسلیں دماغی اور

⁠⁠⁠حوالہ : روحانی نماز

دماغی توازن

سوال: نہایت دکھ کے ساتھ لکھ رہا ہوں۔ میرے والد صاحب 12سال سے پاگل ہیں۔ میں نے پاکستان کی کوئی ایسی جگہ نہ چھوڑی جہاں ان کو لے کر نہ گیاہوں۔ لاہور کے پاگل خانے میں بھی تین سال تک داخل رکھا۔ بہت تعویذ گنڈے کروائے لیکن کوئی افاقہ نہیں ہوا۔ والد صاحب کی کی

⁠⁠⁠حوالہ : روحانی ڈاک (جلد اوّل)

مکہ کے نام

قرآن میں ہے: ’’تحقیق پہلا گھر جو ٹھہرا لوگوں کے واسطے یہی ہے جو بکہ(مکہ) میں ہے۔ برکت والا اور نیک راہ جہاں کے لوگوں کو۔ اس میں نشانیاں ظاہر ہیں کھڑے ہونے کی جگہ ابراہیم کی، اور جو اس کے اندر آیا اسے امن ملا اور اللہ کا حق ہے لوگوں پر حج کرنا اس گھر کا

⁠⁠⁠حوالہ : رُوحانی حج و عُمرہ

علم و آگہی

جس فرد کے دل میں شک جا گزیں ہوں وہ اللہ کا عارف کبھی نہیں ہو سکتا اس لئے کہ شک شیطان کا سب سے بڑا ہتھیار ہے جس کے ذریعے وہ آدم زاد کو اپنی روح سے دور کر دیتا ہے ۔ روحانی قدروں سے دوری آدمی کے اوپر علم و آگہی کے دروازے بند کر دیتی ہے ۔

⁠⁠⁠حوالہ : کشکول

خون میں کمزوری

سوال: میرے شوہر پچھلے تین چار سال سے ایک عجیب کیفیت سے دوچار ہیں۔ اس مرض یا کیفیت کی صحیح تشخیص نہیں ہو پائی کیونکہ مختلف اندازوں سے اب تک جو علاج ہوا ہے اس کے حوصلہ افزاء نتائج مرتب نہیں ہوئے۔ معاملہ یہ ہے کہ میرے شوہر کی کہنیوں، ہاتھوں کی انگلیوں اور

⁠⁠⁠حوالہ : روحانی ڈاک (جلد اوّل)

جب ایک ہی جیسی اطلاعات سب کو ملتی ہیں تو مقدرات اور نظریات میں تضاد کیوں ہوتا ہے؟

سوال: انسان کی زندگی اطلاعات پر قائم ہے۔ اطلاعات تقاضوں کو جنم دیتی ہے اور تقاضوں کی تکمیل سے زندگی آگے بڑھتی ہے۔ سوال یہ پیدا ہوتا ہے کہ جب ایک ہی جیسی اطلاعات سب کو ملتی ہیں تو مقدرات اور نظریات میں تضاد کیوں ہوتا ہے اور انسان ایک طرز پر زندگی کیوں ن

⁠⁠⁠حوالہ : اسم اعظم

انگریزی زبان

لکھتے ہوئے ندامت ہوتی ہے کہ ہمارے دانشوروں نے انگریزی پڑھنا مردوں کے لئے بھی ناجائز قرار دیا تھا۔ لڑکیاں تو بے چاری اور بے زبان تھیں۔ ۶۱۲ء میں ہندوستان “جنت نشان” میں طبقہ نسواں کی مظلومیت حد سے گزر چکی تھی۔ عورتوں اور جانوروں میں کوئی فرق نہیں کیا جات

⁠⁠⁠حوالہ : ایک سو ایک اولیاء اللہ خواتین

شیر کی عقیدت

ایک دن واکی شریف کے جنگل میں پہاڑی ٹبّے پر چند لوگوں کے ہمراہ چڑھتے چلے گئے۔ نانا رحمۃ االلہ علیہ مسکرا کر کہنے لگے۔’’میاں جس کو شیر کا ڈر ہو وہ چلاجائے، میں تو یہاں ذراسی دیر آرام کروں گا۔ خیال ہے کہ شیر ضروری آئے گا۔ جتنی دیر قیام کرے اس کی مرضی ۔ تم

⁠⁠⁠حوالہ : تذکرہ بابا تاج الدینؒ

براہِ مہربانی اپنی رائے سے مطلع کریں۔

Your Name (required)

Your Email (required)

Subject (required)

Category

Your Message (required)