یہ تحریر العربية (عربی) English (انگریزی) Русский (رشیئن) ไทย (تھائی) 简体中文 (چائینیز) میں بھی دستیاب ہے۔

مراقبہ

ذہنی سکون کے لئے مراقبہ کیجئے

بے قراری، عدم سکون اور اضطراب سے رستگاری حاصل کرنے کے لئے اسلاف سے جو ہمیں ورثہ ملا ہے اس کانام مراقبہ ہے۔ مراقبہ کے ذریعے ہم اپنے اندر مخفی صفات کو منظر عام پرلاسکتے ہیں۔ خوف و دہشت میں مبتلا،عدم تحفظ کے احساس میں سسکتی اور مصائب و آلام میں گرفتارنوع انسانی کے لئے مراقبہ ایک ایسا لائحہ عمل ہے جس پر عمل پیرا ہوکر ہم اپنا کھویا ہوا اقتدار دوبارہ حاصل کر کے زندہ قوموں کی صفوں میں ممتاز مقام حاصل کر سکتے ہیں ۔

غلامی

جن قوموں سے ہم مرعوب ہیں اور جن قوموں کے ہم دست نگر ہیں ان کی طرز فکر کا بغور مطا لعہ کیا جائے تو یہ بات سورج کی طرح روشن ہے کہ سائنس کی ساری ترقی کا زور اس بات پر ہے کہ ایک قوم اقتدار حاصل کرے اور ساری نوع انسا نی اس کی غلام بن جا ئے یا ایجادات سے اتن

⁠⁠⁠حوالہ : کشکول

اللہ کا امین

سوال: اللہ تعالیٰ نے انسان کی خدمت کے لئے ہر شئے تخلیق فرمائی اور ہر شئے کو انسان کی خدمت پر معمور کر دیا۔ انسان کو یہ فضیلت کیوں دی گئی۔ اللہ تعالیٰ انسان سے کیا چاہتا ہے اور انسان اس آزمائش پر کس طرح پورا اتر سکتا ہے؟ جواب: دنیا میں چھ ارب انسانوں کی

⁠⁠⁠حوالہ : ذات کا عرفان

شیر آیا

ابولہب اور اس کی بیوی امِ جمیل اور اس کا بیٹا عقبہ حضور صلی اللہ علیہ وسلم کو اذیت پہچانے کا کوئی موقع ہاتھ سے نہیں جانے دیتے تھے۔ ایک بار عقبہ گستاخی کا مرتکب ہوا تو حضور صلی اللہ علیہ وسلم نے اللہ تعالیٰ سے دعا کی۔ ’’اے اللہ! اس پر اپنے کتوں میں سے ک

⁠⁠⁠حوالہ : محمد الرّسول اللہ(صلی اللہ علیہ وسلم) جلد دوئم

زندگی میں سانس کا عمل دخل

ماورائی علوم سیکھنے کیلئے مضبوط اَعصاب اور طاقتور دماغ کی ضرورت ہوتی ہے۔ اَعصاب میں لچک پیدا کر نے، دماغ کو متحرّک رکھنے اور قوّتِ کارکردگی بڑھانے کیلئے سانس کی مشقیں بےحد مفید اور کارآمد ہیں۔ قلندر شعور کا مسافر جب سانس کی مشقوں کا کنٹرول حاصِل کرلیتا

⁠⁠⁠حوالہ : قلندر شعور

بے روح معاشرہ

مرد معاشرے بے روح معاشرے میں اس لئے تبدیل ہوا کہ مرد نے مادیت اور فزیکل باڈی ہی کو سب کچھ سمجھ لیا ہے۔ اگر خواتین نے اس کی اصلاح نہیں کی تو “مادری معاشرہ” پدرانہ معاشرے سے زیادہ ہولناک ہو گا۔ اتنا فساد پھیل جائے گا کہ زمین اجڑ جائے گی۔ آندھیاں چلیں گی

⁠⁠⁠حوالہ : ایک سو ایک اولیاء اللہ خواتین

توانائی

زندگی اور زندگی سے متعلق جذبات و احساسات، واردات و کیفیات، تصورات و خیالات اور زندگی سے متعلق تمام دلچسپیاں اس وقت تک ہیں جب تک سانس کا سلسلہ قائم ہے۔ سانس اندر جاتی ہے، سانس باہر نکلتی ہے، اندر کے سانس سے باطن کا رشتہ جڑ جاتا ہے اور سانس کے باہر نکلنے

⁠⁠⁠حوالہ : صدائے جرس

سورج مرکز ہے، زمین مرکز نہیں

اب سورج کی پرستش شروع ہوگئی۔ کو برنیکسؔ آفتاب پرست تھا۔ اس لئے کہاسورج مرکز ہے۔ زمین مرکز نہیں ہے۔ پیشتر بھی یہی بات کہی گئی تھی لیکن کوبرنیکسؔ نے زیادہ زور دے کر ہئیت کو نقشہ بد ل کر پیش کیا۔ آئزک نیوٹن کا زمانہ آیا۔ اس نے کہا کشش ثقل اور میکانکیت فطر

⁠⁠⁠حوالہ : تذکرہ قلندر بابا اولیاءؒ

زندگی کے دو رُخ

تعریف اس رب کائنات کے لئے ہے جو اپنی ربوبیت کی صفت عالی سے ہمیں کھانا کھلاتا ہے اور جو ہمارے معاشی، معاشرتی اور زندگی کے سارے کاموں میں ہماری مدد فرماتا ہے جس نے ہمیں رہنے بسنے کے لئے آرام و استراحت کے وسائل کے ساتھ ٹھکانہ بخشا ہے۔ انسانی زندگی کے دو ر

⁠⁠⁠حوالہ : تجلیات

اور آپؐ نے نہیں پھینکی مٹھی خاک

مدینہ آنے کے بعد چند ماہ مسلمان مہاجرین کے لئے بڑے صبر آزما تھے۔ مہاجرین اپنا سارا اثاثہ اور بیوی بچے چھوڑ کر مدینہ آئے تھے۔ انہیں مالی پریشانیوں کے ساتھ ساتھ گھر گرہستی کی دشواریوں کا بھی سامنا تھا۔ سیدنا علیہ الصلوۃ والسلام نے مدینہ کے مسلمانوں او

⁠⁠⁠حوالہ : محمد الرّسول اللہ(صلی اللہ علیہ وسلم) جلد دوئم

حبیبہ مصریہؒ

ریاضت و مجاہدے میں کمال حاصل تھا۔ عشق الٰہی میں سرشار رہتی تھیں۔ حضرت حبیبہ مصریہؒ کا ارشاد ہے۔ خوش و خرم زندگی بسر کرنے کا راز یہ ہے کہ آدمی ہر حال میں اللہ تعالیٰ کا شکر ادا کرے۔ جو لوگ دولت کو سب کچھ سمجھتے ہیں اللہ تعالیٰ کے قانون کے مطابق ان کی زن

⁠⁠⁠حوالہ : ایک سو ایک اولیاء اللہ خواتین

ابو ہریرہؓ کی ماں

حضرت ابو ہریرہؓ کی والدہ مشرکہ تھیں۔ ایک روز ان کی والدہ نے حضورعلیہ الصلوۃ والسلام کی شان میں گستاخی کی۔ حضرت ابو ہریرہؓ روتے ہوئے حضور صلی اللہ علیہ وسلم کی خدمت میں حاضر ہوئے اور والدہ کی طرف سے صدمہ پونچنے کی شکایت کی۔ حضورعلیہ الصلوۃ والسلام نے ال

⁠⁠⁠حوالہ : محمد الرّسول اللہ(صلی اللہ علیہ وسلم) جلد دوئم

اچھی ہے بری ہے دہر فریاد نہ کر

اچھی ہے بری ہے دہر فریاد نہ کر جو کچھ کہ گزرگیا اسے یاد نہ کر دوچار نفس عمر ملی ہے مجھ کو دوچار نفس عمر کو بربا د نہ کر دنیا کی ہر چیز ایک ڈگر چل رہی ہے۔ نہ یہاں کوئی چیز اچھی ہے نہ بری ہے۔ ایک بات جو کسی کے لئے خوشی کا باعث ہے، وہی دوسرے کے لئے پریشان

⁠⁠⁠حوالہ : تذکرہ قلندر بابا اولیاءؒ

سانس رک جاتا ہے

سوال: آپ نے ایک ایسے بچہ، جس کی روتے روتے سانس رک جاتی ہے اور بے حد نڈھال ہو جاتا ہے کے لئے شہادت کی انگلی پر یا حی یا قیوم پڑھ کر 21روز تک شہد چٹانے کے لئے بتایا ہے۔ عرض ہے کہ میرے بچے کی بھی یہی کیفیت ہے۔ اس کی عمر دو سال ہے۔ جب روتا ہے تو بہت دیر می

⁠⁠⁠حوالہ : روحانی ڈاک (جلد اوّل)

درونِ خانہ

کُلُّ نَفْسٍ ذَائِقَۃُ ا لْمَوْت کے مصداق تربیت کے اسی زمانے میں حضور بابا صاحبؒ کی والدہ ماجدہ سعیدہ بی بی چار بیٹیوں اور دو بیٹوں کو چھوڑ کر عالم بقا میں تشریف لے گئیں۔حضوربابا صاحب ؒ کی ایک ہمشیرہ کے علاوہ سب بچے بابا صاحب ؒ سے چھوٹے تھے اور ان میں

⁠⁠⁠حوالہ : تذکرہ قلندر بابا اولیاءؒ

بی بی اُم طلقؒ

عبادت گزار اور خدارسیدہ خاتون بی بی ام طلقؒ صوم صلوٰۃ کی پابند اور تہجد گزار تھیں۔ قرآن پاک کی تلاوت نہایت ذوق و شوق سے کرتی تھیں۔ معانی اور مفہوم پر تفکر کرتی تھیں۔ مشہور بزرگ حضرت سفیان بن عینیہؒ آپ کے ہم عصر تھے اور کسب فیض کے لئے ان کی خدمت میں حاض

⁠⁠⁠حوالہ : ایک سو ایک اولیاء اللہ خواتین

ہپناٹزم

حضرت جنید بغدادیؒ کے ایک مرید پر شیطان نے اس طرح حملہ کیا کہ ہر روز رات کے وقت ایک زرافہ لے کر اس کے گھر جاتا اور اس سے کہتا میں ایک فرشتہ ہوں تجھے جنت میں لے جانے آیا ہوں۔ زرافہ کی گردن میں جو رسی تھی اسے پکڑ کر ایک جگہ لے جاتا۔ وہ جگہ ایک کوڑے کا ڈھی

⁠⁠⁠حوالہ : قدرت کی اسپیس

مچھلی مل جائے گی؟

ایک رات کا ذکر ہے، تقریباً ساڑھے گیارہ بجے رات کا وقت تھا۔ قلندر بابا اولیاء ؒ نے ارشاد فرمایا، مچھلی مل جائے گی؟ میں نے عرض کیا حضور ساڑھے گیارہ بج رہے ہیں میں کوشش کرتا ہوں، کسی ہوٹل میں ضرور مل جائے گی۔ قلندر بابا اولیاءؒ نے فرمایا ہوٹل کی پکی ہوئی

⁠⁠⁠حوالہ : قلندر شعور

گھٹیا اور گھٹنوں کا درد

دیکھئے فالج کا علاج۔

⁠⁠⁠حوالہ : روحانی علاج

مائی نوریؒ

مائی نوریؒ غیر مسلم خاتون تھیں، حضرت بو علی شاہ قلندرؒ کی بڑی عقیدت مند تھیں۔ آپؒ نے عشق میں گھر بار، عزیز و اقارب کو خیر باد کہہ کر اسلام قبول کر لیا۔ اکثر خواب میں حضرت بو علی شاہ قلندرؒ کی زیارت ہوتی تھی۔ جب عشق اور لگن بڑھی تو خواہش ہوئی کہ قلندر ص

⁠⁠⁠حوالہ : ایک سو ایک اولیاء اللہ خواتین

سر کے بال لمبے کرنے کے لئے

جوانی کی عمر میں بال موٹے ہوتے ہیں جو بعد میں نسبتاً پتلے ہو جاتے ہیں۔ بال ایک حد تک بڑھنے کے بعد رک جاتے ہیں اور کچھ عرصہ کے بعد گر جاتے ہیں۔ بال کی عمر کم و بیش چار سال ہوتی ہے۔ کنگھی کرتے وقت اگر چند بال گر جائیں تو یہ کوئی تشویش کی بات نہیں ہے۔ لیک

⁠⁠⁠حوالہ : روحانی علاج

براہِ مہربانی اپنی رائے سے مطلع کریں۔

Your Name (required)

Your Email (required)

Subject

Category

Your Message