یہ تحریر العربية (عربی) English (انگریزی) Русский (رشیئن) ไทย (تھائی) 简体中文 (چائینیز) میں بھی دستیاب ہے۔

مراقبہ

ذہنی سکون کے لئے مراقبہ کیجئے

بے قراری، عدم سکون اور اضطراب سے رستگاری حاصل کرنے کے لئے اسلاف سے جو ہمیں ورثہ ملا ہے اس کانام مراقبہ ہے۔ مراقبہ کے ذریعے ہم اپنے اندر مخفی صفات کو منظر عام پرلاسکتے ہیں۔ خوف و دہشت میں مبتلا،عدم تحفظ کے احساس میں سسکتی اور مصائب و آلام میں گرفتارنوع انسانی کے لئے مراقبہ ایک ایسا لائحہ عمل ہے جس پر عمل پیرا ہوکر ہم اپنا کھویا ہوا اقتدار دوبارہ حاصل کر کے زندہ قوموں کی صفوں میں ممتاز مقام حاصل کر سکتے ہیں ۔

بے بضاعتی

یہ نہیں معلوم کہاں سے آیا ہوں اور نہ ہی یہ معلوم ہے کہ منزل کہاں ہے۔ ایسا علم جس کو نہ تو کھو جانے کا علم ہو اور نہ ہی کچھ پا لینے کا علم ہو علم نہیں ہے ۔ بے بضاعتی اور کم مایگی کا یہ حال ہے تو ہم حقیقت کے سمندر میں کس طرح غوطہ زن ہو سکتے ہیں۔ حقیقی عل

⁠⁠⁠حوالہ : کشکول

بی بی اُم علیؒ

بی بی ام علیؒ تیسری صدی ہجری میں بہت بڑی عارفہ گزری ہیں، مشہورو الی اللہ شیخ احمد خضرویہؒ کی زوجہ محترمہ تھیں۔ ان کے والدین بہت مالدار تھے اور انہوں نے اپنی بیٹی کے لئے بے شمار دولت چھوڑی لیکن متوکل بیٹی نے اپنے عابد و زاہد شوہر کے ساتھ قناعت کی زندگی

⁠⁠⁠حوالہ : ایک سو ایک اولیاء اللہ خواتین

روح کی مرکزیّتیں اور تحریکات

لطائف کا بیان پہلے آ چکا ہے۔ روح کے چھ لطائف دراصل روح کی چھ مرکزیّتیں ہیں جن کو بہت وسعتیں حاصل ہیں۔ ان مرکزیّتوں کی حرکت دن رات کے وقفوں سے یکے بعد دیگرے صادِر ہوتی رہتی ہیں۔ چھ لطیفوں میں سے تین لطیفوں کی حرکت بیداری میں اور باقی تین لطیفوں کی حرکت

⁠⁠⁠حوالہ : لوح و قلم

وجدانی دماغ

مذہبی نقطۂ نظر سے انسانی زندگی کا مطالعہ کرنے سے یہ معلوم ہوتا ہے کہ انسان کے علم و جہل ، آرام و تکلیف ، آزادی و پابندی اور صحت و بیماری وغیرہ کا دارومدار محج اس بات پر ہے کہ انسان کون سا دماغ استعمال کرتا ہے، آدم کی اولاد میں زندگی گزارنے کے لئے یہ دو

⁠⁠⁠حوالہ : صدائے جرس

غیب کا شہُود

روحانی دنیا میں رات غیب کے شہود کا ذریعہ ہے۔ اللہ رب العزت نے اپنے محبوب صلی اللہ علیہ و سلم سے ارشاد فرمایا ہے: ’’اے میرے محبوب، رات کو اٹھ کر قرآن پاک کی تلاوت کیجئے۔‘‘ ’’پاک ہے وہ ذات جو اپنے بندے کو راتوں رات لے گئی مسجد حرام سے مسجد اقصیٰ تک۔‘‘ اس

⁠⁠⁠حوالہ : تجلیات

روزہ روح کی بالیدگی کا ذریعہ ہے

سوال: اکثر پڑھنے اور سننے میں آیا ہے کہ روزہ روح کی بالیدگی کا ذریعہ ہے روزہ روحانی صلاحیتوں کو جلا بخشتا ہے لیکن اس بات کا تسلی بخش جواب نہیں دیا جاتا ہے کہ بھوکا رہنا کس طرح روحانی صلاحیتوں کو بیدار کرکے قرب الٰہی کا باعث بنتا ہے؟ جواب: قرآن پاک کے ا

⁠⁠⁠حوالہ : اسم اعظم

بی بی امتہ الجیلؒ

ایک مرتبہ صاحب نظر اور صاحب دل حضرات میں یہ بحث چھڑی کہ “ولایت” کیا ہے؟ سب نے اپنی اپنی رائے دی۔ لیکن کسی ایک نتیجے پر نہیں پہنچ سکے۔ طے پایا کہ امتہ الجلیلؒ کے سامنے یہ مسئلہ پیش کیا جائے جب ان کے سامنے یہ مسئلہ پیش کیا گیا تو انہوں نے فرمایا: “ولی وہ

⁠⁠⁠حوالہ : ایک سو ایک اولیاء اللہ خواتین

تنہائی کا احساس

سوال: عرصہ دراز سے خوف اور عجیب قسم کی وحشت کا شکار ہوں۔ والدین کی وفات کے بعد تنہائی کا احساس بہت زیادہ ہوتا ہے ، طبیعت میں ہر وقت بے چینی رہتی ہے، مزاج میں ٹھہراؤ اور سکون بالکل نہیں ہے۔ بہت جلدخوفزدہ ہو جاتی ہوں، ہر وقت نبض پر ہاتھ رہتا ہے۔ نفسیاتی

⁠⁠⁠حوالہ : روحانی ڈاک (جلد اوّل)

رسولی

رسولی ناک میں ہو، پیٹ میں ہو یا جسم کے کسی حصہ میں ہو، ان میں درد ہویا نہ ہو، علاج سب کا نیلے رنگ کی شعاعیں ہیں۔ نیلے رنگ کی شعاعیں رسولی پر ڈالی جائیں اور نیلے رنگ کی شعاعوں کاپانی مریض کو پلایا جائے۔

⁠⁠⁠حوالہ : رنگ و روشنی سے علاج

جسم میں لطیفے

سوال: میں چند سوالات کرنا چاہتا ہوں جس کے جوابات نہ صرف میرے لئے بلکہ دیگر قارئین کے لئے بھی فائدہ مند ہوں گے۔ آپ اس کے جوابات ضرور شائع کریں۔۔۔۔۔۔ممنون رہوں گا۔۔۔۔۔۔سوالات درج ذیل ہیں۔ 1۔ انسانی جسم میں لطیفے (روشن نقطے) ہوتے ہیں۔ لطیفے کا کیا مطلب ہے

⁠⁠⁠حوالہ : روح کی پکار

علی بردران اورگاندھی جی

مولانا محمد علی اور مولانا شوکت علی ناگپور آئے تو باباصاحبؒ کے پاس حاضر ہونے کے بجائے راجہ رگھوجی راؤ کو لکھا کہ باباصاحبؒ سے ملنے کا وقت مقرر کردیں ۔ راجہ صاحب پریشان ہوگئے کہ کون ساوقت دیں۔ باباصاحبؒ کے کوئی اوقات مخصوص نہیں تھے۔ لوگ ہر وقت حاضر ہوتے

⁠⁠⁠حوالہ : سوانح حیات بابا تاج الدین ناگپوری رحمۃ اللہ علیہ

غفلت

قرآن کہتا ہے ’’زمین و آسمان میں اہل ایمان کے لئے حقائق و بصائر موجود ہیں۔‘‘ یعنی اہل ایمان کی خصوصیت یہ ہے کہ زمین و آسمان کی حقیقتوں اور زمین و آسمان کے اندر موجود تخلیقات کے فا رمولوں ( EQUATION) پر ان کی گہری نظر ہوتی ہے۔ ان کے مشاہدے کی طاقت کہکشان

⁠⁠⁠حوالہ : کشکول

سر کے بال گر رہے ہیں

سوال: میری عمر سولہ سال ہے اور میرے سر کے بال خشک ہو کر گرنے شروع ہو گئے ہیں۔ ہاتھ لگاؤ تو ٹوٹ جاتے ہیں۔ تیل بھی کافی لگایا لیکن کوئی اثر نہیں ہوا۔ برائے مہربانی کوئی ایسا وظیفہ یا آزمودہ نسخہ بتائیں جس سے میرے سر کے بال دوبارہ ملائم اور مضبوط ہو جائیں

⁠⁠⁠حوالہ : روحانی ڈاک (جلد اوّل)

اندر کی آنکھ

آدم کو جب اللہ نے بنایا تو اس طرح بنایا کہ آدم اندر زیادہ دیکھتا تھا اور باہر کم۔ باہر دیکھتا تھا تو……باغوں و طیور……نہریں……آبشاریں……بلبل کا ایک شاخ سے دوسری شاخ پر پُھدکنا……کوئل کی کوک……کبوتر کی غُٹر غُوں……چڑیوں کی چہک……

⁠⁠⁠حوالہ : محبوب بغل میں

فرشتے نے پوچھا

حضور اکرم صلی اللہ علیہ و سلم نے دو دوستوں کی ملاقات کا ایمان افروز نقشہ کھینچتے ہوئے فرمایا۔ ’’ایک شخص اپنے دوست سے جو کسی دوسری بستی میں تھا ملاقات کے لئے چلا۔ خدا نے اس کے راستے پر ایک فرشتے کو بٹھا دیا۔ فرشتے نے اس سے پوچھا‘ کہاں کا ارادہ ہے؟ اس نے

⁠⁠⁠حوالہ : تجلیات

بغیر استاد کیا نقصان ہوتا ہے؟

  سوال: ٹیلی پیتھی کے اسباق میں یہ بات کئی بار کہی جا چکی ہے کہ ٹیلی پیتھی، ہپناٹزم اور اس نَوع کی دیگر مشقیں جن کا مقصد ذہنی قوّتوں کو بیدار کرنا ہوتا ہے کسی ماہر استاد کی اجازت و نگرانی کے بغیر نہیں کرنی چاہئیں۔ یقیناً اس تنبیہہ کے پسِ پشت ٹھوس

⁠⁠⁠حوالہ : روح کی پکار

حضرت محمد ﷺ اور تجارت

پیارے بچو! مکہ شہر میں رہنے والے لوگ دو طریقوں سے کاروبار کرتے تھے۔ ۱۔ تجارت کے ذریعہ۔ ۲۔مویشیوں(بھیڑ، بکری، گائے اور اونٹ) کی پرورش کے ذریعہ۔ ہمارے پیارے نبی حضرت محمد ﷺ کے خاندان کے زیادہ تر لوگ تجارت کرتے تھے ۔  آپ ﷺ کے چچا ابو طالب بھی تاجر تھے اور

⁠⁠⁠حوالہ : بچوں کے محمد ﷺ (جلد اول)

اقتباس

☆ انسان پابہ گل ہے، جنّات پابہ ہیولیٰ ہیں، فرشتے پابہ نور۔ یہ تفکر تین قسم کے ہیں اور تینوں کائنات ہیں۔ ☆ تفکر کے ذریعے ستاروں، ذرّوں اورتمام مخلوق سے ہمارا تبادلۂ خیال ہوتارہتاہے۔ ان کی انا یعنی تفکّر کی لہریں ہمیں بہت کچھ دیتی ہیں اور ہ

⁠⁠⁠حوالہ : سوانح حیات بابا تاج الدین ناگپوری رحمۃ اللہ علیہ

چڑچڑاپن

مریض کو زیادہ تراندھیرے میں رکھنا چاہئے یہاں تک کہ مکان میں کمرے کے پردے بھی سیاہ رہیں تو بہترہے۔

⁠⁠⁠حوالہ : رنگ و روشنی سے علاج

روشن ضمیر

ہر طرف سے ذہن ہٹا کر یکسوئی کے ساتھ کسی گوشے یا کھلے آسمان کے نیچے بیٹھ کر ۳۰۰ مرتبہ یَا مَاجِدُ پڑھا جائے۔ اللہ کے فضل و کرم سے دل نور علیٰ نور ہو جائے گا اور اللہ تعالیٰ کی صفات کا مشاہدہ ہو گا۔ اس وظیفہ میں ہر قسم کی تمباکو نوشی، لہسن، پیاز اور بدبو

⁠⁠⁠حوالہ : روحانی نماز

براہِ مہربانی اپنی رائے سے مطلع کریں۔

Your Name (required)

Your Email (required)

Subject (required)

Category

Your Message (required)