یہ تحریر العربية (عربی) English (انگریزی) Русский (رشیئن) ไทย (تھائی) 简体中文 (چائینیز) میں بھی دستیاب ہے۔

مراقبہ

ذہنی سکون کے لئے مراقبہ کیجئے

بے قراری، عدم سکون اور اضطراب سے رستگاری حاصل کرنے کے لئے اسلاف سے جو ہمیں ورثہ ملا ہے اس کانام مراقبہ ہے۔ مراقبہ کے ذریعے ہم اپنے اندر مخفی صفات کو منظر عام پرلاسکتے ہیں۔ خوف و دہشت میں مبتلا،عدم تحفظ کے احساس میں سسکتی اور مصائب و آلام میں گرفتارنوع انسانی کے لئے مراقبہ ایک ایسا لائحہ عمل ہے جس پر عمل پیرا ہوکر ہم اپنا کھویا ہوا اقتدار دوبارہ حاصل کر کے زندہ قوموں کی صفوں میں ممتاز مقام حاصل کر سکتے ہیں ۔

محدود

فعل و عمل میں اپنی ذات کو اولؔیت دینے سے جو خول وجود میں آتا ہے وہ انسان کا رشتہ لازمانیت اور لامکانیت سے منقطع کر دیتا ہے۔ وہ ایک محدود دائرے کے اندر سوچتا، سمجھتا اور محسوس کرتا ہے۔ کائنات ایک ماوراء الماورا اور لامحدود ہے۔ جن لوگوں نے اپنے اعمال و ا

⁠⁠⁠حوالہ : کشکول

آدھے جسم میں درد

سوال: روحانی ڈائجسٹ ہمیں اور ہمارے گھر والوں کو بہت پسند ہے اور ہم سب آپ کے شکر گزار ہیں کہ آپ لوگوں کو سیدھی راہ دکھا رہے ہیں۔ میں آپ کو ایک بار پھر زحمت دے رہی ہوں۔ مسئلہ یہ ہے کہ میری امی جان مستقل بیمار رہتی ہیں۔ ایک بیماری چھوٹتی ہے تو دوسری لگ جا

⁠⁠⁠حوالہ : روحانی ڈاک (جلد اوّل)

عُمرہ

* احرام عمرہ کی شرط ہے۔ * خانہ کعبہ کے گرد سات چکر لگانا یعنی طواف کعبہ عمرہ کا فرض کہلاتا ہے۔ * صفا و مروہ یعنی دونوں پہاڑیوں کے درمیان سات چکر لگانا۔ یعنی صفا اور مروہ کی سعی عمرہ کا واجب ہے۔ * حلق (سرمنڈوانا یا قصر سر کے بال کتروانا) عمرہ کا دوسرا و

⁠⁠⁠حوالہ : رُوحانی حج و عُمرہ

حضرت ابو یزیدؒ

حضرت ابویزیدؒ فرماتے ہیں کہ میں نے پہلی مرتبہ حج کرنے کے وقت بجز گھر کے کوئی چیز نہیں دیکھی۔ دوسری مرتبہ گھر کو بھی دیکھا اور صاحب خانہ کو بھی دیکھا۔ تیسری دفعہ جب حج کے لئے گیا تو گھر کو نہیں دیکھا صرف صاحب خانہ ہی کو دیکھا۔

⁠⁠⁠حوالہ : رُوحانی حج و عُمرہ

رباعی

اچھی ہے بُری ہے دہر فریاد نہ کر جوکچھ کہ گزر گیا اُسے یاد نہ کر دو چار نفَس عُمر ملی ہے تجھ کو دو چار نفَس عُمر کو برباد نہ کر (قلندر بابا اولیاءؒ)

⁠⁠⁠حوالہ : قلندر شعور

مسکراہٹ

آدمی آدمی کی دوا ہوتا ہے۔ آدمی آدمی کا دوست ہوتا ہے۔ دوستی کو پروان چڑھانے کے لئے ضروری ہے کہ آپ اپنے دوستوں کے معاملات میں دلچسپی لیں، ان کے کام آئیں اور مالی اعانت کی استطاعت نہ ہو تو ان کے لئے وقت کا ایثار کریں۔ یہ بھی حق دوستی ہے کہ جب آپس میں میل

⁠⁠⁠حوالہ : تجلیات

نیکی کیا ہے؟

اللہ رب العزت سارے جہانوں کا پرورش کرنے والا ، سب کی ضروریات کا کفیل اور سب کا نگہبان ہے۔ چنانچہ جب ہم انسانوں سے بھلائی سے پیش آتے ہیں، ان کی مدد کرتے ہیں تو اللہ تعالیٰ کی خوشنودی کے مستحق ٹھہرتے ہیں۔ قرآن پاک نے ہم پر حقوق اللہ کے ساتھ حقوق العباد ی

⁠⁠⁠حوالہ : تجلیات

بد خوابی سے (کپڑے نا پاک ہونا) نجات پانے کے لئے

سونے سے پہلے بستر میں چٹ لیٹ کر گیارہ مرتبہ پڑھیں اور سینے پر پھونک  ماردیں یہ عمل اکیس ۲۱ روز تک جاری رکھیں گرم اور کھٹی چیزوں سے پرہیز کریں۔

⁠⁠⁠حوالہ : روحانی علاج

مادی امداد

مراقبہ کا مقصد باطنی نگاہ کو حرکت دینا ہے۔ یہ مقصد اس وقت پورا ہو سکتا ہے۔ جب آنکھ کے ڈیلوں کی حرکات زیادہ سے زیادہ ساکت ہو جائیں یا انہیں زیادہ سے زیادہ معطل رکھا جائے۔ آنکھ کے ڈیلوں کے تعطل میں جس قدر اضافہ ہوتا ہے۔ اسی قدر باطنی نگاہ کی حرکت بڑھ جات

⁠⁠⁠حوالہ : مراقبہ

نماز اور مراقبہ

تمام انبیاء کی طرح نبی آخر الزماں محمد الرّسول اللہ علیہ الصلوٰۃ والسّلام نے بھی حکم ربانی کے مطابق احکام و عبادات کا ایک دستور امت کو عطا کیا ہے۔ اس دستور میں اس بات کا پورا خیال رکھا گیا ہے کہ ہر طبقے اور ہر سطح کا شخص اس پر عمل کر سکے اور اس عمل کے

⁠⁠⁠حوالہ : مراقبہ

پیش لفظ

بڑے ،بوڑھے اور بزرگوں کا کہنا ہے کہ ہر انسان کی زندگی کا کوئی ایک مقصد ہوتا ہے۔ اگر زندگی بامقصد نہ ہو تو انسان آدمیت کے دائرے میں تو رہتا ہے لیکن انسانوں میں اس کا شمار نہیں ہوتا۔ اللہ تعالیٰ نے قرآن پاک میں آدم کی تعریف انسان اور آدم کے نام سے کی ہے۔

⁠⁠⁠حوالہ : محمد الرّسول اللہ(صلی اللہ علیہ وسلم) جلد سوئم

روزہ

روزہ ایک ایسی عبادت ہے جس کا کوئی بدل نہیں ہے۔ روزے کے عظیم فوائد اور بے پایاں اثرات کو بیان کیا جائے تو اس کے لیئے ہزاروں ورق بھی ناکافی ہوں گے۔ مختصر یہ کہ روزہ امراضِ جسمانی کا مکمّل علاج ہے۔ رُوحانی قدروں میں اضافہ کرنے کا ایک مؤثر عمل ہے۔ برائیوں

⁠⁠⁠حوالہ : آوازِ دوست

احسن تقویم

دل نے چاہا کہ اپنے محسن، اپنے سرتاج، اپنے جسم مثالی، اپنے ہمدرد و غم گسار، رحمت پروردگار، نورعین، آواز حق، مرشد کریم قلندر بابا اولیاء رحمتہ اللہ علیہ کی وہ باتیں آپ کو سناؤں گا جو میری زندگی بن گئی ہیں۔ یہ بات اب پردہ نہیں رہی کہ پانچ ہزار ایک سو دس د

⁠⁠⁠حوالہ : صدائے جرس

نماز کی اقسام

سوال: روحانی علوم کے حصول کے لئے مراقبہ کرنا کیوں ضروری ہے۔ کیا مراقبہ کے بغیر بھی یہ علوم حاصل ہو سکتے ہیں؟ جواب: اللہ تعالیٰ نے انواع و اقسام کی مخلوقات پیدا کیں اور ہر نوع کی تخلیق کا کچھ نہ کچھ مقصد رکھا۔ اسی طرح اللہ تعالیٰ نے انسان کی تخلیق بھی خ

⁠⁠⁠حوالہ : توجیہات

یوم

اللہ تعالیٰ قرآن پاک میں فرماتا ہے کہ میں نے دنیا کو چھ یوم میں پیدا کیا ہے۔ یوم کے معنی کیا ہیں۔ یوم حقیقت میں (ILLUSION) نظر کے دھوکے کو کہتے ہیں۔ اس کے دو حصے ہوتے ہیں۔ (CONCEPT) یعنی خیال اور دوسرا (CHROMOSOME) جسم۔ یہ دو حصے چھ حصوں میں بٹ جاتے ہی

⁠⁠⁠حوالہ : قدرت کی اسپیس

مصری تہذیب

حضرت یوسفؑ کنعان میں پلے بڑھے تھے۔ تہذیبی اور تمدنی ترقی مصر کے مقابلے میں کم تھی وہاں قبائلی اور نیم خانہ بدوشانہ طرز زندگی تھی جبکہ مصر معاشرت کے اعتبار سے جدید ملک تھا۔ عزیز مصر حضرت یوسفؑ کی شخصیت اور فہم و فراست سے بہت متاثر ہوا۔ کچھ ہی عرصے میں ا

⁠⁠⁠حوالہ : محمد الرّسول اللہ(صلی اللہ علیہ وسلم) جلد سوئم

بیوہ عورت

سوال: بارہ سال پیشتر میں نے ایک بیوہ عورت سے شادی کی تھی۔ ہم دونوں میں بہت محبت تھی کچھ عرصہ سے میں یہ دیکھ رہا ہوں کہ وہ میری ذات سے بیزاری محسوس کر رہی ہے ۔ بات بات پر جھگڑنا اس کا معمول بن گیا ہے۔ دل چاہتا ہے اسے طلاق دے دوں لیکن اپنی بچی کی خاطر خو

⁠⁠⁠حوالہ : روحانی ڈاک (جلد اوّل)

کیوں دوڑتے ہو حضرت

حسام الدین صاحب بیان کرتے تھے کہ باباصاحبؒ کی شہرت سن کر میں نے ارادہ کیاکہ میں آپ کا مرید ہوجاؤں۔ اسی رات خواب میں دیکھا کہ باباصاحبؒ ایک حوض پر وضو کر رہے ہیں۔ اس پانی کی عجیب تاثیر ہے کہ اس سے اعضاء آئینہ کی طرح شفاف ہوجاتے ہیں۔ وضو کرنے کے بعد بابا

⁠⁠⁠حوالہ : سوانح حیات بابا تاج الدین ناگپوری رحمۃ اللہ علیہ

حیات و موت

دن ماہ وسال پر محیط جس زمانی وقفے کو زندگی کا نام دیا جاتا ہے اس کا تعلق دراصل مادی مظاہر سے ہے جب یہ مادی وسائل مفقود ہو جاتے ہیں اور ہنستا بولتا، چلتا پھرتا گوشت پوست کا پتلا ساکت و بے حس ہو جاتا ہے اور زندگی کے آثار ختم ہو جاتے ہیں تو ہم اسے مردہ قر

⁠⁠⁠حوالہ : صدائے جرس

علم و عمل

یہ دور علم کا دور ہے اور نئی نئی ایجادات کی وجہ سے سائنس کا زمانہ ہے۔ آنکھ کا اندھا بھی اس حقیقت سے انکار نہیں کر سکتا کہ موجودہ زمانے کی ساری ترقی، تحقیق ریسرچ کے اوپر قائم ہے۔ قوموں کے عروج و زوال کی تاریخ واضح طور پر انکشاف کرتی ہے کہ جن قوموں نے جد

⁠⁠⁠حوالہ : صدائے جرس

براہِ مہربانی اپنی رائے سے مطلع کریں۔

Your Name (required)

Your Email (required)

Subject (required)

Category

Your Message (required)